NA panel requested to revive pending legislation about CAA

اسلام آباد: قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے ہوا بازی سے زیر التواء قانون سازی کو بحال کرنے کی درخواست کی گئی، جس کا مقصد سول ایوی ایشن اتھارٹی (سی اے اے) کے ریگولیٹر اور سروس فراہم کرنے والے کے دو کرداروں کو الگ کرنا ہے۔

پاکستان میں CAA ایک ریگولیٹر اور سروس فراہم کرنے والے دونوں کے طور پر کام کرتا ہے، اور بین الاقوامی سطح پر، یہ دونوں کردار الگ الگ اتھارٹیز کے زیر انتظام ہیں۔

اس کی روشنی میں، سی اے اے نے کمیٹی سے زیر التواء قانون سازی کو بحال کرنے کی درخواست کی ہے، جس کا مقصد ان دونوں کرداروں کو الگ کرنا ہے۔

کمیٹی نے ہوائی اڈوں کے ارد گرد بلند و بالا عمارتوں کی تعمیر کے لیے زیادہ سے زیادہ اونچائی کا اعلان کرنے کے لیے سی اے اے کو اختیار دینے کی بھی سفارش کی۔

اجلاس ایم این اے سید مبین احمد کی زیر صدارت منعقد ہوا۔

پہلے یہ ترقی تھی…



>Source link>

>>Join our Facebook page From top right corner. <<

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *