اسلام آباد: سابق وزیر خزانہ اور پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما مفتاح اسماعیل نے ہفتہ کو مسلم لیگ (ن) کو خیرباد کہہ دیا اور پارٹی کے تمام عہدوں سے استعفیٰ دے دیا۔

مفتاح نے اپنا استعفیٰ مسلم لیگ ن کے سیکرٹری جنرل احسن اقبال کو بھجوا دیا۔

مسلم لیگ (ن) کے سیکریٹری جنرل کو لکھے گئے خط میں مفتاح نے کہا: “پارٹی ڈھانچے کی آئندہ تنظیم نو کو دیکھتے ہوئے، میں سمجھتا ہوں کہ اب وقت آگیا ہے کہ میں اسے باضابطہ بناؤں جو پہلے سے درست ہے اور آگے بڑھوں۔ اس لیے میں مسلم لیگ ن سندھ کے جنرل سیکریٹری کے عہدے سے استعفیٰ دیتا ہوں اور تمام پارٹی کمیٹیوں سے بھی استعفیٰ دیتا ہوں۔

اسحاق ڈار نے پاکستان کو بڑا مالی نقصان پہنچایا، مفتاح اسماعیل

انہوں نے پارٹی اور حکومت میں بھی ذمہ داریاں سونپنے پر پارٹی سپریمو نواز شریف اور وزیر اعظم شہباز شریف کا شکریہ ادا کیا۔

انہوں نے احسن اقبال، شاہد خاقان عباسی، خواجہ آصف، ایاز صادق اور پرویز رشید سمیت دیگر پارٹی رہنماؤں کا بھی شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ اگرچہ وہ اب انتخابی سیاست میں سرگرم نہیں ہوں گے، لیکن وہ سماجی طور پر منصفانہ اور معاشی طور پر مستحکم اور اچھی حکومت والا پاکستان دیکھنے کی شدید خواہش کا اظہار کرتے ہیں۔

یہ پیشرفت ان اطلاعات کے درمیان سامنے آئی ہے کہ پارٹی کی چیف آرگنائزر مریم نواز نے مفتاح کو پارٹی عہدے سے ہٹانے کا فیصلہ کیا ہے۔ مفتاح نے حال ہی میں حکومت کی معاشی ہینڈلنگ کے خلاف آواز اٹھائی ہے۔ وہ وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے آئی ایم ایف کے ساتھ ڈیل اور دیگر معاشی معاملات پر ان کے انتظام پر تنقید کرتے تھے۔

مفتاح، خاقان عباسی اور پی پی پی چھوڑنے والے مصطفیٰ کھوکھر ‘ری امیجنگ پاکستان’ کے تصور کے تحت ہونے والے مباحثوں کے سلسلے میں حصہ لے رہے ہیں۔

ملک کے حکمراں اتحاد سے تعلق رکھنے والے ناراض سیاست دانوں کے ایک گروپ نے ملک گیر بحث کا آغاز کیا جس کا نام “Reimagining Pakistan” ہے، جس میں بحث کے لیے وسیع پیمانے پر مسائل اٹھائے گئے اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہ آزادی کے بعد سے انہیں مناسب طریقے سے حل نہیں کیا گیا۔

کچھ غیر مطمئن سیاست دانوں کی طرف سے ملک کے بقایا مسائل پر قومی بحث شروع کرنے کے اقدام نے میڈیا میں قیاس آرائیوں کو بھی جنم دیا کہ اس سال کے آخر میں ہونے والے عام انتخابات سے قبل ایک نئی سیاسی جماعت کا آغاز ہونے والا ہے۔ تاہم اسماعیل نے اس بات کی تردید کی تھی کہ اس طرح کا کوئی منصوبہ بند ہے۔



>Source link>

>>Join our Facebook Group be part of community. <<

By hassani

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *