اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی نے جمعرات کو ’مائنس عمران‘ فارمولے پر کام کرنے والوں کو واضح پیغام دیتے ہوئے کہا کہ ’وہ عمران خان کے ساتھ کھڑے ہیں۔

قریشی – جنہیں حکام نے 3 ایم پی او کے تحت حراست میں لیا ہے – نے یہ پیغام اپنی بیٹی گوہر بانو قریشی اور اپنے وکیل بیرسٹر تیمور ملک سے راولپنڈی کی اڈیالہ جیل میں ملاقات کے دوران پہنچایا۔

بانو نے قریشی سے ملاقات کے بعد اپنے ایک ویڈیو پیغام میں کہا کہ قریشی نے پی ٹی آئی کے کارکنوں کو واضح پیغام دیا ہے کہ وہ عمران خان کے ساتھ تھے اور آخری سانس تک ان کے ساتھ رہیں گے۔

قریشی کے وکیل نے کہا کہ وہ اپنے موکل کی نظر بندی کے خلاف لاہور ہائی کورٹ (ایل ایچ سی) کے راولپنڈی بنچ میں درخواست دائر کرنے جا رہے ہیں۔

قریشی کا یہ پیغام فواد چوہدری کی قیادت میں پی ٹی آئی کے منحرف ہونے والوں کے ایک گروپ کے بدھ کے روز اڈیالہ جیل میں شاہ محمود قریشی سے ملاقات کے بعد آیا ہے، بظاہر انہیں عمران خان کو چھوڑنے پر راضی کرنے کے لیے۔

تاہم ذرائع کا کہنا ہے کہ سابق گورنر سندھ عمران اسماعیل، عامر کیانی اور محمود مولوی پر مشتمل گروپ کی ملاقات، جو جیل کے الگ کمرے میں منعقد کی گئی تھی، اپنے مقصد میں ناکام رہی۔

ملاقات کے چند منٹ بعد قریشی کے صاحبزادے زین قریشی نے ٹویٹر پر کہا: “مخدوم صاحب پارٹی کے وائس چیئرمین ہیں اور ایک نظریے کا نام ہے۔ ہم تحریک انصاف اور عمران خان کے نظریے کے ساتھ کھڑے ہیں۔ وہ [Shah Mahmood] صرف اصولوں اور خدمت کی سیاست کی ہے عہدے اور لالچ کی نہیں۔

کاپی رائٹ بزنس ریکارڈر، 2023



>Source link>

>>Join our Facebook Group be part of community. <<

By hassani

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *