کوہاٹ: کوہاٹ پولیس نے دہشت گردی اور دیگر مقدمات میں پاکستان تحریک انصاف کے 6 رہنماؤں کو مینٹیننس آف پبلک آرڈر آرڈیننس کے سیکشن 3 میں بریت کے بعد جمعہ کی رات بنوں جیل سے رہا ہوتے ہی دوبارہ گرفتار کر لیا۔ انہیں 9 مئی 2023 کو جیل میں رکھا گیا تھا۔

انہیں بنوں جیل کے باہر انتظار کرنے والی پولیس وین میں ڈال کر کوہاٹ منتقل کر دیا گیا۔

ان کے وکلاء کا کہنا تھا کہ پولیس نے انہیں پشاور ہائی کورٹ کی جانب سے ضمانتی مچلکے جمع کرانے کے بعد رہا کرنے کے احکامات کے باوجود دوبارہ گرفتار کر لیا۔

گرفتار رہنماؤں میں سابق وزیر قانون امتیاز شاہد قریشی، پی ٹی آئی کے سابق ضلعی صدر آفتاب عالم، ممتاز رہنما داؤد آفریدی، سابق ضلعی ناظم نسیم آفریدی، گمبٹ تحصیل چیئرمین ساجد اقبال اور بشیر جان شامل ہیں۔

تاہم امتیاز شاہد قریشی کو دوبارہ گرفتار کیے جانے کے چند گھنٹے بعد رہا کر دیا گیا۔

داؤد آفریدی اور بشیر جان کے خلاف کنٹونمنٹ اور سٹی پولیس نے 7-ATA کے تحت مقدمہ درج کیا تھا جبکہ ساجد اقبال کو ایک شخص کو زخمی کرنے کے مقدمے میں دوبارہ گرفتار کیا گیا تھا۔ سابق ضلع ناظم نسیم آفریدی اور پی ٹی آئی کے سابق ضلعی صدر آفتاب عالم کو سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے پر دوبارہ گرفتار کر لیا گیا۔

ڈان میں شائع ہوا، 21 مئی 2023



>Source link>

>>Join our Facebook Group be part of community. <<

By hassani

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *